25

سندھیلیانوالی اور گردونواح ميں مزدوروں کا استحصال جاری، کم اُجرت پر مزدوری کرنے لگے 

سندھیلیانوالی(اسد عباس اسد)

سندھیلیانوالی اور گردونواح ميں مزدوروں کا استحصال جاری، کم اُجرت پر مزدوری کرنے لگے

تفصیلات کے مطابق : سندھیلیانوالی اور گردونواح ميں مزدوروں کا استحصال جاری ہے، گورنمنٹ کی طرف سے مزدور کی کم از کم ماہانہ اجرت اٹھارہ ہزار روپے مقرر ہے، جسکی خلاف ورزی جاری ہے، مہنگائی کے اس دور میں، کریانہ شاپس، میڈیکل سٹورز، جانوروں کے باڑوں اور کھیتوں میں کام کرنے والے مزدوروں کو ماہانہ تنخواہ آٹھ سے بارہ ہزار روپے دی جا رہی ہے، جسکی وجہ سے مزدوروں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے، گھریلو اخراجات پورے کرنا مشکل ہو چکا ہے، گورنمنٹ کی طرف سے مزدوروں کو پوری مزدوری کی ادائیگی کے کوئی اقدامات نہیں کئے جا رہے ہیں

مزدوروں نے پنجاب حکومت سے مطالبہ کیا ہے، مزدور کی کم از کم اجرت اٹھارہ ہزار روپے دلانے کے اقدامات کئے جائیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں