97

ماں اور بچے کی صحت کو یقینی بنانے کیلئے کنگ سلمان پیکج کا آغاز کر دیا گیا،

قصور (بیورو رپورٹ میاں خلیل صدیق آراٸیں )

ماں اور بچے کی صحت کو یقینی بنانے کیلئے کنگ سلمان پیکج کا آغاز کر دیا گیا، یونیسیف کی ٹیم کا مصطفی آباد اور نواحی دیہات کا دورہ، بچوں کے حفاظتی ٹیکوں کو بہتر بنانے کیلئے ای پی آئی ویکسینیٹر کی ٹریننگ کی گئی،کنگ سلمان پروجیکٹ قصور میں ماں اور بچے کی اموات میں واضع کمی کا سبب بنے گا، ڈاکٹر ثمرہ خرم، تفصیلات کے مطابق یونیسیف کی زیر نگرانی کنگ سلمان اور اسلامی بینک کے تعاون سے قصور میں کنگ سلمان ریلیف پروجیکٹ کا آغاز کر دیا گیا،اس سلسلہ میں یونیسیف کی ٹیم ڈاکٹر جوہر ہیلتھ سپیشلسٹ یونیسیف پاکستان کنٹری آفس،ڈاکٹر سائرہ، ڈاکٹر عمران نے ڈاکٹر ثمرہ خرم ڈسٹرکٹ کوڈینیٹر آئی آر ایم این سی ایچ کے ہمراہ ڈسٹرکٹ قصور کے دورہ کے موقع پر مصطفی آباداور اس کے نواحی دیہات کا بھی دورہ کیا، کمیونٹی سنٹرز کا دورہ کے دوران خواتین سے لیڈی ہیلتھ ورکرز کی طرف سے آگاہی کے متعلق سوالات کئے گئے، اور خواتین کو ماں اور بچے کی صحت کے حوالے سے لیکچر دئیے گئے، یونیسیف کی ٹیم نے ماں اور بچے کی صحت کو فروغ دینے کیلئے ہیلتھ سروس کی بہتری کیلئے تھرمامیٹر، رائٹامیٹرز، بی پی آپریٹرز، سٹیتھو سکوپ، ماسک وغیرہ ودیگر سامان بھی فراہم کیا، ویکسی نیشن کو محفوظ بنانے کیلئے جہاں پر بجلی کا ایشو ہے وہاں سولر آئی ایل آر فراہم کرنے کا وعدہ کیا،  ڈاکٹر جوہر ہیلتھ سپیشلسٹ یونیسیف پاکستان کنٹری آفس،ڈاکٹر سائرہ، ڈاکٹر عمران، ڈاکٹر ثمرہ خرم ڈسٹرکٹ کوڈینیٹر آئی آر ایم این سی ایچ،ڈاکٹر آصف خاں نیازی ڈپٹی ڈاریکٹر آئی آر این ایم سی ایچ نے کہا کہ کنگ سلمان پروجیکٹ کا مقصد قصور میں دوران زچگی ماں اور بچے کی اموات میں کمی لانا ہے،ماں اور بچے کی صحت کے فروغ کیلئے خصوصی اقدامات کئے جائیں گے، اس پروجیکٹ کے تحت بچوں کی ویکسی نیشن کے عملہ کو بہتر اور ہر بچے کو ویکسی نیشن کو ممکن بنایا جائے گا، بچوں کے حفاظتی ٹیکوں کے حوالے سے بھی آگاہی دی جائے گئی، اس پروجیکٹ کی وجہ سے قصور میں ماں اور بچے کی اموات میں واضع کمی آئے گی، زچگی کے دوران خواتین کی اموات کے حوالے سے بھی خصوصی اقدامات کئے جائیں گے، ڈسٹرکٹ لیول ہیلتھ منیجرز، بی ایچ یو،ڈسپنسری لیول کے سٹاف، لیڈی ہیلتھ ورکز کی ٹریننگ کرکے ماں اور بچے کی صحت کے حوالے سے زیادہ سے زیادہ کام کیا جائے گا، بچوں کے حفاظتی ٹیکوں کو بہتر بنانے، ماں اور بچے کی صحت کویقینی بنانے کیلئے سہولیات کو مزید بہتر بنانے کیلئے اقدامات کا آغاز کر دیا گیا، جہاں بجلی کا ایشو ہے وہاں پر سولر آئی ایل آر لگائیں جائیں گے، بچوں کے حفاظتی ٹیکوں کو بہتر بنانے کیلئے ای پی آئی ویکسینیٹر کی ٹریننگ کی گئی،پاکستان کے پانچ اضلاع میں اس پروجیکٹ کا آغاز کیا گیا ہے جس میں قصور بھی شامل ہے، دورہ کے موقع پر ڈاکٹر آصف خاں نیازی ڈپٹی ڈاریکٹرآئی آر این ایم سی ایچ،ڈاکٹر صادق، ڈاکٹر عبدالقادر، ڈاکٹر امتیاز اولکھ، ڈاکٹر عبدالقادر ودیگر عملہ بھی ان کے ہمراہ تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں