81

راجہ جنگ کے علاقے میں ناکہ پر کھڑی پولیس کی مبینہ فائرنگ سے ایک شخص ہلاک

قصور (میاں خلیل صدیق آرائیں سے)

راجہ جنگ کے علاقے میں ناکہ پر کھڑی پولیس کی مبینہ فائرنگ سے ایک شخص ہلاک جبکہ دو افراد زخمی ھو گئے ۔پولیس نے فائرنگ کرنے والے ملازمین کوگرفتار کرلیا ڈی پی اوصہیب کی ورثاء کو انصاف کی یقین دہانی۔گذشتہ رات مقتول اصغر اپنے دیگر دو دوستوں عبدالجبار اور رمضان کے ساتھ کار پر آریے تھے کہ جب وہ راجہ جنگ کے قریب پولیس نے ناکہ پر انہیں رکنے کا اشارہ کیا مگر انہوں نے گاڑی نہ روکی جسپر پولیس نے فائرنگ کر دی اصغر موقع پر ہی جاں بحق ھو گیا اور عبدالجبار اور رمضان شدید زخمی ہو گئے جنہیں علاج کے لئے ڈسٹرکٹ ہسپتال قصور منتقل کر دیا گیا۔مقتول کے بھائی اشرف کا کہنا ہے کہ میرا بھائی ایک شریف شہری ہے اور اسے ناکہ پرروکنے کی بجائے پولیس نے سیدھی گولیاں ماریں ہیں جس سے میرا بھائی اصغر شہید ہواہے اور دو راہگیرزخمی ہوئے ہیں ورثاہسپتال میں دھاڑیں مار مار کر روتے رہے ان کا کہنا تھاکہ پولیس سے ہمیں کسی قسم کی انصاف کی امید نہیں جبکہ فائرنگ کرنے والے پولیس ملازمین کا کہنا ہے کہ ناکہ پر رکنے کے لیے کہا گیا جس پر کار سواروں نے پولیس پر فائرنگ شروع کردی پھر پولیس کو بھی جوابی کاروائی کرتے ہوئے فائرنگ کرنا پڑی جس کے نتیجہ میں ایک شخص ہلاک اور دو زخمی ہوگئے ہیں ڈی پی اوقصور صہیب اشرف کے حکم پر فائرنگ کرنے والے ملازمین میں چار کوگرفتار کرکے ان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے جبکہ ایس ایچ او موقع سے فرا ر ہے۔ڈی پی او صہیب اشرف کا کہنا تھاکہ سارے معاملے کو خود دیکھ رہا ہو

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں